ants mouth to mouth data transfer 226

کیا آپکو پتا ہے چیونٹیاں منہ سے منہ لگا کر کیا کرتی ہیں؟اللہ کی کارگری دیکھیں.

آپ میں سے بہت سے دوستوں نے دیکھا ہوگا۔کہ چیونٹیاں ہر لمحہ بعد ایک دوسرے کو منہ لگاتی ہیں۔ایک لمبے عرصے تحقیق کے بعد یہ بات سامنے آئی ہے۔کہ جیسے انسان ایک دوسرے سے بات کرنے کے لیے آواز کا استعمال کرتا ہے۔ایسے ہی اللہ تعالی نے چیونٹیوں کو یہ صلاحیت دی ہے۔

ants mouth to mouth data transfer

کہ وہ ایک دوسرے کے منہ سے منہ ملا کر ایک رطوبت دسرے کہ منہ میں ڈالتی ہیں۔جس کو چیونٹیوں کا دماغ ڈی کوڈ کرکے بات سمجھاتا ہے۔اس کے علاوہ ان کو بارش ہونے کا بھی پہلے سے پتا لگ جاتا ہے۔۔دوستوں اللہ تعالی نے ایسے لاکھوں جہان بنا رکھے ہیں۔جن کا ابھی تک انسانوں کو پتا تک نہیں ہے۔اسی لیے اللہ تعالی نے فرمایا ہے۔کہ  تم اپنے رب کی کون کونسی نعمت کو جھُٹلاوگے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں